فلسطینی معصوم لڑکی اسرائیل کے لیے خطرہ قرار دے دی گئی، اسرائیلی سپریم کورٹ نے احد تمیمی کے بارے اہم فیصلہ سنا دیا

child.png

مقبوضہ بیت المقدس(آئی این پی)اسرائیلی سپریم کورٹ نے فلسطینی لڑکی احد تمیمی کو رہا کرنے سے انکار کر دیا، اسرائیل کی سیکیورٹی ایجنسی شن بیٹ نے تمیمی کو اسرائیلی سلامتی کیلئے خطرہ قرار دے دیا۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق اسرائیلی سپریم کورٹ نے فلسطینی لڑکی احد تمیمی کو رہا کرنے سے انکار کر دیا ہے شن بیتھ کا کہنا ہے کہ تمیمی اب بھی خطرہ ہیں۔غیرملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق صیہونی سپریم کورٹ کے پے رول بورڈ کا اجلاس ہوا جس میں فلسطینی لڑکی احد تمیمی کو رہا کرنے

کا معاملہ زیر غور آیا لیکن پے رول بورڈ نے تمیمی کو رہا کرنے سے انکار کر دیا۔ بورڈ نے کہا کہ اسرائیل کی سیکیورٹی ایجنسی شن بیٹ نے تمیمی کو اسرائیلی سلامتی کیلئے خطرہ قرار دیا ہے اس لئے اسے رہا نہیں کیا جا سکتا۔اسرائیلی فوجی گزشتہ سال احد تمیمی کے گھر کے آنگن میں گھس آئے تھے اور تمیمی نے بہادری کا مظاہرے کرتے ہوئے ایک اسرائیلی فوجی کو تھپڑ رسید کیا تھا جس پر صیہونی فوج نے تمیمی اور ان کی والدہ کو گرفتار کرکے چھ ماہ کی سزا دلوائی تھی۔

یہ خبر جس ویب سائٹ سے لی گئی ہے اس کا لنک یہاں ہے. شکریہ

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *